بھن

انجم قریشی

تانگھ دی بھن
بڑی زہری اے
نِمی نِمی پِیڑ نال
لُوں لُوں ہنب گیا اے
پر میں ہُن ہاہ نہیں بھرنی
میں اپنے آپ کولوں نس کے
تیتھوں دُور ہون دی راہ لبھ رہی آں
میں ہف گئی آں
پر تھکی نہیں

Read this poem in Roman or ਗੁਰਮੁਖੀ

انجم قریشی دی ہور شاعری